سیکس سٹوری دیسی سیکس چدائی کا فل مست مزہ لینا

(sex story desi sex chudai ka full mast maza lena)

sex story home mae sex karna bhi secure hota hae

یہ دیسی سیکس کہانی ایسے گھر کی ہے اس گھر میں صرف ایک لڑکی اور ایک لڑکاتھا اس کے شوہر کا انتقال ہوگیا تھا  شوہر کا انتقال شادی کے تھوڑے عرصے کے بعد ہی ہو گیا تھا

اور آپ دوست جانتے ہونگے کہ شادی کے تھوڑے عرصے کے بعد ہی اگر شوہر کا انتقال ہو جائے تو سیکس کی بھوک کتنی شدید تر ہو جاتی ہے اور سیکس کے بنا زندگی نہیں ہے چوت

میں لن بھر لینے کی امنگ دل میں رہتی ہے اور سکون نہیں ملتا لیکن اس وقت جب چوت کا پانی نکل جائے چاہے وہ فنگرنگ کی بنا پہ نکلے یا کوئی ہمسایہ لڑکا چود کے چلا جائے اس لڑکی کی عمر بائیس سال تھی

اور وہ ایک بہت خوبصورت دیسی سیکس کرنے کے قابل لڑکی تھی  دیسی سیکس اس میں کوٹ کوٹ کے بھرا تھاجو ایک خوبصورت لڑکی میں ہوتا ہے مثلاً دودھ کی خوبصورت بناوٹ

اور کولہوں کی خوبصورت بناوٹ اس کے دودھ کا سائز چھتیس تھا  چھتیس سائز اتنا بھرپور ہوتا ہے کہ ممے ہاتھوں میں پورے پورے آتے ہیں اور ان کو منہ میں بھر کے چوپا لگانے کو دل کرتا ہے

اور اس کا رنگ دودھ کی طرح سفید تھا  مکھن ملائی کی طرح بنی ہوئی تھی اس کی چوت کا اندرونی رنگ بھی شاندار گلابی تھا جس کو چوسا جا سکتا تھااور اس کے بال قدرتی طور پر گولڈن تھے

 ہائے چوت کے سنہری سنہری بال وہ پری کی طرح لگتی تھی جو بھی دیکھتا اس کا لن ایک بار تو اوپر نیچے ہونے لگتا تھا

اور اس لڑکی کے کولہوں کی بناوٹ بھی بہت عمدہ تھی اس لڑکی کمر اور چوتڑ کا شیب بہت مست تھا اس کی کمر پتلی تھی مگر گانڈ جہاں جہاں سے اسٹارٹ ہو رہی تھی

پھیل رہی تھی اور اس کا چہرہ کی بناوٹ بھی بہت لش تھی اور وہ جب لال رنگ کا لباس پہنتی تھی تو وہ بہت سیکسی لگتی تھی اس کو جب جب میں دیکھتا تھا تو میرے لنڈ کی جو حالت ہوتی تھی

وہ کیسے بتاوں وہ دیسی سیکس کرنے کے لیئے تیار لگ رہی تھی اور یہ میں ہی جانتا ہوں جو مجھ پر گزرتی تھی وہ میں ہی جانتا ہوں میری دوکان اس لڑکی کے گھر کے سامنے تھی

میں روز اس کے گھر سے پانی کا کولر بھرنے جاتا تھا اور میں کم از کم اس کے گھر کے دس سے پندرہ چکر لگاتا تھا اور میں اس کو گھیرنے میں لگا تھا کہ کسی طرح اس لڑکی سے بات ہو جائے

میں اس کو کنواری لڑکی سمجھتا تھا مگر وہ شادی شدہ نکلی میری حرکتوں سے وہ دیسی سیکس والی سمجھ چکی تھی کہ میں اس کے پیچھے پاگل ہوگیا ہوں ایک دن میں نے اس لڑکی کو پرپوز کر دیا

اور اس نے کہا کہ میں شادی شدہ ہوں  میرا شوہر فوت ہو گیا ہے وہ دکھی نظڑ آ رہی تھی اس کو میں نے فورس کیا اس نے مجھ سے تھوڑا ٹائم مانگا اور میرے فورس پر وہ دودن بعد راضی گئی

میں اس لڑکی سے بات کرتا رہا آپ جانتے ہی ہیں کہ دوستی کے بعد کیا ہوتا ہے اور پھر ہم ایک دوسرے کے بغیر نہیں رہتے تھے وہ صرف وہ لڑکی سمجھتی تھی اور میرے دماغ میں صرف اس کو چودنا تھا کیوں کہ میں دیسی سیکس کرنے کے لیئے لڑکیوں کا خوار لڑکا تھا

ایک دن اس نے مجھے گھر میں بلایا اور اس وقت اس کا بچہ سو رہا تھا اور اس دن وہ دیسی سیکس والی لڑکی بہت اچھی لگ رہی تھی  اس نے جان بوجھ کے بچے کو پہلے ہی سلا دیا تھا

اور بھرہور چدائی کی منتظر تھی ا سکی چوت سے بھی پانی نکلنے کو بے تاب تھا میرا لن تو رات سے ہی کھڑا تھا سوچ سوچ کے ہی جنونی ہوا جا رہا تھااس نے لال رنگ کا سوٹ پہنا تھا

اور خوب تیار ہوئی تھی میں نے جاتے ہی اس کو گلےلگایا  واہ کیا مست ممے ٹچ ہو رہے تھے اور اس کو پاگلوں کی طرح کسنگ کرنا شروع کر دی وہ اتنی گرم ہو گئی تھی کہ اس کے جسم میں سے آگ نکل رہی تھی

میں نے اس کی گردن پر جب کِس کی تو وہ بولی نہیں کرو یار کچھ غلط ہو جائے گا میں اپنے آپ کو نہیں روک رہی  ا سکی سی سی کی آواز مجھے اور بھی جنون دے رہی تھی

دل کر رہا تھا جلدی سے اس کی چوت پھاڑ دالوں اپنے موٹے لن سے دیسی سیکس ہوا تو میں برداشت نہیں کر پاؤں گی اس کو میں کسنگ کرتا رہا پھر اس کی میں نے قمیض اتاری

اور اس کے دودھ برازیئر میں اور خوبصورت لگ رہے تھے  سیکسی جالی دار برا تھی میں نے اس کی شلوار اتاری اور اس کی انڈر ویئر اتاری  کیا گورے چوتڑ تھے  میں نے اس کی چوت اور چوتڑ چاٹنے شروع کر دیئے میں جنونی ہو گیا تھا

اور اس کی چوت کو مسلنا شروع کر دیا  ساتھ ساتھ اپنی زبان اس کی چوت میں  دال دی اس نے سسکی لی اور بولی دال دو پلیز مت ترساو مجھے مر جاونگی

مجھے یہ سن کے بہت اچھا لگااس کے دودھ بہت ملائم تھے مجھے اس کے ملائم دودھ دبانے میں بہت مزہ آرہا تھا  ساتھس اتھ چوت کے مزے بھی لے اور دے رہا تھا

پھر اس نے کہا کہ تم مجھ کو مار ڈالو گے یار جلدی سے ڈالو میری چوت کے اندر میں نے اس دیسی سیکس والی کی چوت میں جب اپنا لنڈ ڈالا تو اس کی سیکسی چیخ نکلی

 چوت پھٹی چلی گئی کئی ماہ سے اس کی چوت میں لن نہیں گیا تھا چوت کی اندرونی دیواروں سے لن چپک گیا تھااور میں نے اس کی چوت کے اندر اور باہر ڈالنا شروع کر دیا

پھر میں دس منٹ تک کرتا رہا اس کو میں نے اب ڈوگی پوز میں کر کے چودنا شروع کر دیا پھر میں نے اس کو بازووں میں اٹھا کے لن کے اوپر کیاا ور چودتا رہا اس کی چوت دو بار فارغ ہو چکی تھی اور دوستوں میں نے کئی سال تک اس کو چوداا ور شوہر کی کمی محسوس نہیں ہونے دی

sex story jab lun ko sifr choot chae thi

What did you think of this story??

Comments

Scroll To Top