اردو سیکس سٹوری پاکستانی عورت کو زبردست چودنا

(urdu sex story pakistani aorat ko zabardast chodna)

urdu sex story mae mazidar chudai

یہ کہانی پاکستانی عورت کی ہے  اس پاکستانی عورت کی جس کی چوت کے شوق میں باہر کے ملک میں رہنے والے بھی پاکستانی آ کے اس کے ساتھ  انجوائے کرتے ہیں

پاکستانی عورت    اپنے انداز بدن اور سیکسی اسٹائل کی وجہ سے اس کو چودنا بہت اچھا لگتا ہے  اور اس کا سیکس اسٹائل پوری دنیا میں مشہور ہےمیں سیکس کریزی اور سیکس کی بھوک کبھی میرے اندر سے کتم نہیں ہوئی

  زندگی میں جس لڑکی کو چہا اس کے ساتھ سیکس کسی نا کسی طور پہ ہو جاتا تھا اس کہانی میں بھی دلچسپ  باتیں ہیں  جو پڑھ کے آپ کو مزہ ملے گا اور آپکا  دل بھی کرے گا کہ پاکستانی لڑکی کی پھدی ماروں  اور اس کے ساتھ سیکس کروں

اور میں ایک مصروف آدمی  بن چکا ہوں زندگی میں کئی ایک اتار چڑھاو دیکھ چکا ہوں میرا بہت تجربہ ہے سیکس بارے کاروباری حوالے سے میں ایک جہاندیدہ مرد ہوں میں چالیس سال کا ہوں

اور میں نے پاکستان میں اپنی پسند سے شادی کی تھی میری بیوی بہت ہی خوبصورت ہے ایک دم سیکسی ہے موٹے موٹے مزے دار والے بوبز ہیں مگر میں اپنا ٹائم زیادہ اس کے ساتھ نہیں گزارتا

کیوں کہ میں اپنے کام کےسلسلے میں ملک سے باہر رہتا ہوں اور پاکستان میں میری پاکستانی عورت اور دو بچے رہتے  ہیں میں سال میں ایک مہینے کے لئے پاکستان جاتا ہوں اور پھر واپس آجاتا ہوں

میری جاب ہی اس قسم کی ہے کہ میں اس سے زیادہ ادھر نہیں رہ سکتا مجھے ایک بات اور بھی ہے کہ باہر کے ملک میں میں اپنی من پسند زندگی گزار سکتا ہوں

اور وہاں ایک سے بڑھ کے ایک کمال کی سیکسی اور زبردست بوبز والی مجھے بھرے بھرے بوبز والی عورت پسند ہے جس کو ہاتھ لگاوں تو مکھن کی طرح ہو چکنی جوان عورت اس کے ساتھ سیکس کر کے مرد جوان ہی رہتا ہے

 پاکستانی عورت کے لئے بہت کچھ لے کر جاتا ہوں جس سے وہ بہت خوش ہوتی ہے اور مجھے بہت اچھا لگتا ہے اور وہاں میں نیو یارک میں رہتا ہوں اور میری یہاں پر بہت ساری دوست لڑکیاں  بھی ہیں جن کو میں استعمال بھی کرتا رہتا ہوں  وہ مجھ پہ جان چھڑکتی ہیں کیونکہ میر چودنے کا اسٹیمنا بہت اچھا ہے اور میں مزیدار طریقے سے ان کو سیکس کرتا ہوں ا س بات کا عورت بڑا خیال  کرتی ہے کون ا سکو زبردست چودتا ہے

اور ملتا بھی بہت ہوں اور ایک دن کی بات ہے میرے آفس میں ایک لڑکی جاب کے لئے آئی تھی اور وہ مجھے بہت اچھی لگ رہی تھی میں نے اس کو فوراً جاب پر رکھ لیا تھا

اور میں اس کو ایک دن اپنے گھر لے کر گیا تھااور پھر میں نے سحرش  نامی  لڑکی کے کِس کرنا شروع کی پھرمیں نے اپنی پاکستانی عورت سحرش کے کپڑے اتارے

اور وہ پوری ننگی تھی پھرمیں نےسحرش کے مزے دار والے بوبز کو اپنے ہاتھ میں لیا  اس کے بوبز بڑے ہی شاندار تھے اور ان کے نپلز درمیانے سائز کے تھے جن کو منہ میں رکھ کے چوسنا میری عدت بن گئی تھی

اورسحرش کے مموں کو زور دار انداز سے سے دبانا شروع کیا اور پھر میں نےسحرش کے مزے دار والے بوبز کو چوسنا شروع کیااور بہت دیر تک میں سحرش کے مزے دار والے بوبز کو چستا رہا

اور پھرمیں نےسحرش کے پورے جسم پر کِس کیاس کے بعد میں نے اپنا ہاتھ پاکستانی عورت سحرش کی چوڈ پر پھیرنا شروع کیا اور میں نے اپنی انگلی سحرش کی زبردست والی بہتی چوت میں ڈالی

جس پر اس کی آواز نکلی پھر میں نے اپنی زبان اس سحرش کی زبردست والی بہتی چوت پر پھیری اور کِس بھی کی اور، پھر میں نے اپنا ٦ انچ کا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ نکالا تو سحرش نے میرا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ اپنے ہاتھ میں لیا

اور زور دار انداز سے سے ہلانا شروع کیا اور پھرسحرش نے میرا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ اپنے منہ میں لے لیا اور چوسنے لگی

سحرش کو چڑھ گئی تھی  ا سنے تھوڑا سا پیگ میرے ساتھ لگا لیا تھااور وہ بہت گرم ہو چکی تھیاس کو سیکس مل رہا تھا پھر میں نے پاکستانی عورت سحرش کی بڑے چوتڑ والی گانڈ میں اپنا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ ڈالا

اور پھر سحرش کی بڑے چوتڑ والی گانڈ سے خون آنے لگااور سحرش کی درد کے مارے آوازیں نکل رہی تھی اور پھر میں اپنا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ اندر باہر کرنے لگا

پھر میں نے سحرش کو الٹا کیا اور زور دار انداز سے سے اپنا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ اس کی زبردست والی بہتی چوت میں ڈالااس کو بھی اس پوز میں زیادہ درد کے ساتھ لیکن بہت مزہ ملنے لگا تھا ڈوگی پوز ہر پڑھی لکھی عورت کو پسند آتا ہے ایک تو تھکاوٹ اتر جاتی ہے ٹانگیں سیدھی ہو جاتیں ہیں دوسرا پوز بدلنے سے مزہ بھی ڈبل ہو جاتا ہے

اور زور دار انداز سے سے اندر باہر کرنے لگا اور پھر اس کی زبردست والی بہتی چوت پھاڑ دی تھی پھرمیں نے اس کی دونوں مست سکسی لاتیں اوپر اٹھائی اور پھر اپنا لمبا اکڑو ٹھرکی خوار لنڈ اس پاکستانی عورت کی زبردست والی بہتی چوت میں ڈالا

اور زور دار انداز سے سے اچھل رہا تھا وہ پھر سے زور دار انداز سے سے چلائی سکسی سیپھر اس نے ایسے ٢٠ منٹ تک کیااور پھر مجھے آفس سے کال آگئی تھی میں چلا گیا

اور ہمیں جب بھی ملنا ہوتا ہے میں اس کو اپنے گھر لے جاتا ہوں سحرش بہت ہی خوبصورت ہے گورا رنگ کالے بال ٣٦ مزے دار والے بوبز کمال کا مکمل سائز  اس کا قد ہے مجھے وہ بہت پسند ہے یہ تھی میری کہانی

مجھے بہت شوق ہے لڑکیوں سے بات کرنے کااور ان کو استعمال کرنے کامیرے پاس اتنا پیسا ہے کہ میں جس لڑکی سے چاہتا ہوں پیسے دے کر اس سے مل لیتا ہوں اگرچہ کئی لڑکیاں بہت زیادہ پیسے لیکر سیکس کراتی ہیں لیکن میں پھر بھی ان کو چود لیتا ہوں  پیسے زیادہ بھی لگ جائیں تو پرواہ نہیں ہے

urdu sex story jab dil chudai pae aya tha

What did you think of this story??

Comments

Scroll To Top